Day: October 14, 2020

Health

کورونا وائرس کے علاج کے لیے ایک عام دوا دریافت

معدے کے السر کے لیے عام استعمال ہونے والی ایک دوا نئے کورونا وائرس کی نقول بننے کے عمل کی روک تھام میں مددگار ثابت ہوسکتی ہے۔ یہ بات ہانگ کانگ میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی، جس کے مطابق جانوروں پر اس دوا کے استعمال سے کورونا وائرس کی نقول بننے کی روک تھام میں مدد ملی۔ ہانگ کانگ یونیورسٹی کی یہ تحقیق طبی جریدے نیچر مائیکرو بائیولوجی میں شائع ہوگی اور اس میں کورونا وائرس کے ایک نئے اور پہلے سے تیار علاج کی دستیابی کا بتایا گیا ہے۔‎ محققین کا کہنا تھا کہ رینٹیڈائن بسمچ سٹریٹ (آر سی بی) نامی دوا کووڈ کے علاج میں اتنی ہی موثر ہوسکتی ہے جتنی ریمیڈیسور، اور وہ بھی بہت کم قیمت پر۔ آر سی بی میں ایک جزو بسمچ ہوتا ہے، جس کے بارے میں محققین کا کہنا ہے کہ یہ انسانوں اور جانوروں کے کورونا وائرس سے متاثہر خلیات میں وائرل لوڈ کو ایک ہزار فیصد تک کم کرسکتا ہے۔ چوہوں پر اس...
Science

5 جی ٹیکنالوجی سے لیس 4 آئی فونز متعارف، نئے فونز میں کون کون سے اہم فیچرز؟

اس سال ہر آئی فون مختلف ڈسپلے سائز اور میموری گنجائش کے ساتھ پیش کیا گیا اور قیمت کے لحاظ سے بھی متعدد آپشن دیئے گئے۔ آئی فون 12 منی میں 5.4 انچ، آئی فون 12 میں 6.1 انچ، آئی فون 12 پرو میں 6.1 انچ اور آئی فون 12 پرو میکس میں 6.7 انچ ڈسپلے دیا گیا ہے اور یہ اس کمپنی کا اب تک کا سب سے بڑا ڈسپلے والا فون ہے۔ سب آئی فونز میں 5 جی سپورٹ دی گئی ہے اور او ایل ای ڈی ڈسپلے سے لیس ہیں مگر اینڈرائیڈ فونز کے برعکس کسی میں بھی 120 ہرٹز ریفریش ریٹ نہیں دیا گیا۔ اس بار سب آئی فون اے 14 بائیونک پراسیسر سے لیس ہیں جو اس کمپنی کی پہلی 5 این ایم چپ ہے، جو پہلے کے مقابلے میں بلکہ کمپنی کے مطبق اینڈرائیڈ اسمارٹ فونز کے پراسیسرز سے 50 فیصد تیز ہے جبکہ آئی او ایس 14.2 آپریٹنگ سسٹم دیا گیا ہے جس میں کئی نئے فیچرز کا اضافہ کیا گیا ہے۔ مگر اب صارفین کو ایک بڑے دھچکے کا بھی سامنا ہوگا کیونکہ کسی بھی آئی فون کے ...
Health

کپڑے کے فیس ماسک کا استعمال کیا کورونا سے بچاؤ میں مفید ثابت ہوتا ہے؟

کپڑے سے بنے فیس ماسک نوول کورونا وائرس سے بچانے میں موثر ہوتے ہیں مگر اس کی ایک شرط ہے۔ اور وہ ہے کہ ہر بار استعمال کرنے کے بعد انہیں درست طریقے سے دھونا مت بھولیں۔ یہ بات ایک نئی طبی تحقیق میں سامنے آئی جس میں دریافت کیا گیا کہ فیس ماسکس کو باربار استعمال کرنے والے افراد اسے دھوئے بغیر استعمال کریں تو وائرس کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔ طبی جریدے بی ایم جے اوپن میں شائع تحقیق میں بتایا گیا کہ فیس ماسک کو لازمی طور پر زیادہ درجہ حرارت پر دھونا چاہیے تاکہ وہ اچھی طرح جراثیموں سے صاف ہوجائیں۔ سڈنی کی نیو ساؤتھ ویلز یونیورسٹی کے کیربی انسٹیٹوٹ کی اس تحقیق میں 2015 کی ایک تحقیق کا تجزیہ کیا گیا جس میں دیکھا گیا تھا کہ کپڑے کے فیس ماسک کس حد تک نظام تنفس کے وائرسز جیسے فلو، رینو وائرسز اور سیزنل کورونا وائرسز سے تحفظ فراہم کرنے میں موثر ثابت ہوسکتے ہیں۔ اس وقت تحقیق میں دریافت کیا...