Month: August 2020

Health

وہ عادتیں جو چہرے کی جِلد کو خراب کرتی ہیں، ہر بندے کے کام کی خبر آگئی، جانیے تفصیلات

آپ اس بات سے اتفاق کریں یا نہ کریں لیکن ہماری عادتیں ہی اکثر ہماری خراب جلد کی وجہ ہوتی ہیں اور اگر آپ بھی اپنی ان خراب عادتوں کو سدھاریں گے تو اس سے آپ کی جلد پر مثبت نتائج نظر آئیں گے۔ تو چلیں ان عام عادات کے بارے میں جانتے ہیں جن سے ہماری جلد خراب اور بے رونق نظر آنے لگتی ہے۔ ایکنی پر بار بار ہاتھ لگاناہمارے چہرے پر جیسے ہی ایک دانا بھی نکل آئے تو ہمیں الجھن شروع ہوجاتی ہے اور ہم اس پر بار بار ہاتھ لگا رہے ہوتے ہیں جب کہ بہت سے لوگوں کو اس پر ناخن مارنے اور کھرچنے کی عادت ہوتی ہے جو کہ جلد کی خرابی کا باعث بنتی ہے۔ اگر آپ کے چہرے پر ایکنی ہو تو اسے بار بار ہاتھ نہ لگائیں بلکہ منہ پر عرق گلاب کا اسپرے کرتے رہیں تاکہ آپ کا چہرہ ترو تازہ رہے۔ میک اپ کو صاف کیے بغیر سونا ہم میں سے اکثر لوگ اس قدر سست ہوتے ہیں کہ باہر سے آنے کے بعد اپنا میک اپ صاف کیے بغیر ہی ...
Health

برطانیہ کی یونیورسٹی آف نورفوک کی کورونا کے متعلق حیران کن تحقیق سامنے آگئی

برطانیہ کی مختلف یونیورسٹیوں میں لگ بھک 29 ہزار مریضوں پر کی گئی ایک تحقیق کے مطابق یہ انکشاف ہوا ہے کہ ہائی بلڈ پریشر کنٹرول کرنے والی "ایس انہیبیٹر" اور "اے آر بی" کے طبّی ناموں سے مشہور دوائیں مریضوں کی جان بچانے میں مفید ثابت ہوئی ہیں۔ یہ تحقیق برطانیہ کی یونیورسٹی آف نورفوک، نوروِچ یونیورسٹی ہاسپٹل اور یونیورسٹی آف ایسٹ اینجلیا کے ماہرین نے مشترکہ طور پر انجام دی ہے۔ کورونا وبا کی ابتداء میں بعض تحقیقات سے یہ خیال پیدا ہوا تھا کہ ہائی بلڈ پریشر اور امراضِ قلب میں خون پتلا کرنے اور رگوں کو نرم کرنے کے لیے دی جانے والی مذکورہ دوائیں نقصان دہ ثابت ہوسکتی ہیں۔ اس خیال کی صداقت کرنے کے لیے ان تینوں جامعات کے ماہرین نے گزشتہ چند ماہ کے دوران کیے گئے 19 مطالعات کا ایک بار پھر جائزہ لیا، جو مجموعی طور پر ایسے 28872 مریضوں پر کیے گئے تھے جو کورونا وائرس کے باعث مختلف اسپتالوں میں داخل ...
Health

سینی ٹائزر کا مستقل استعمال، برطانوی ماہرین کی بڑے خطرات سے آگاہی، وارننگ جاری کردی

کورونا وائرس کی وبا نے الکوحل ملے صفائی کے محلول جیسے سینی ٹائزر اور کلیننگ جیل کو ہماری زندگی کا لازمی حصہ بنا دیا ہے، تاہم حال ہی میں ماہرین نے اس کے خطرناک مضمرات سے آگاہ کردیا۔ برٹش انسٹی ٹیوٹ آف کلیننگ سائنس سے تعلق رکھنے والے ڈاکٹر اینڈریو کیمپ کا کہنا ہے کہ سینی ٹائزر کا حد سے زیادہ استعمال جراثیم اور وائرسز میں اس کے خلاف مزاحمت پیدا کردے گا، جس کے بعد وہ اتنے طاقتور ہوجائیں گے کہ سینی ٹائزر ان پر بے اثر ہوجائے گا۔ ڈاکٹر کیمپ کا کہنا ہے کہ ہمارے ہاتھوں پر موجود دیگر جراثیم رفتہ رفتہ سینی ٹائزر سے مطابقت پیدا کرلیں گے اور یوں وہ ان پر بے اثر ہوجائے گا۔ ان کا کہنا ہے کہ اگر ایسا ہوا تو جراثیموں اور وائرسز کا حملہ ناقابل تسخیر ہوگا اور ہم طبی طور پر جنگی صورتحال کا شکار ہوجائیں گے۔ ڈاکٹر کیمپ کے مطابق کورونا وائرس کے پھیلاؤ کے ساتھ ساتھ سینی ٹائزر کا استعمال ہ...
Health

بار بار سینیٹائزر لگانے سے ہوجاتے ہیں ہاتھ خشک، انکا بھی حل ڈھونڈ لیا گیا۔۔۔ جانئے خبر میں

کورونا وائرس سے بچنے کے لیے بار بار ہاتھوں کو دھونا اور سینیٹائزر کے ذریعے انہیں جراثیم سے پاک رکھنا ضروری ہے، تاہم یہ عادت ایک اور مسئلے کو جنم دے رہی ہے۔ بار بار ہاتھوں کو دھونے کی وجہ سے اکثر افراد ہاتھوں کی جلد خشک ہونے سے نہایت پریشان ہیں اور اگر اس کا خیال نہ رکھا جائے تو یہ کسی بڑی تکلیف کا سبب بھی بن سکتا ہے۔ ماہرین کے مطابق صابن اور سینی ٹائزر کا اس قدر استعمال ہماری جلد کی قدرتی چکناہٹ کو ختم کر سکتا ہے لہٰذا ہمیں اپنے ہاتھوں کو موئسچرائز کرنے کی پہلے سے زیادہ ضرورت ہے۔ ضروری نہیں کہ ہر بار صابن یا سینی ٹائزر کے استعمال کے بعد موئسچرائزر استعمال کیا جائے تاہم دن میں کئی بار ہاتھوں کو موئسچرائز کیا جانا ضروری ہے۔ ایسے افراد جن کی جلد نارمل ہے انہیں عام ہینڈ کریم یا لوشن استعمال کرلینا چاہیئے تاہم اگر کسی کی جلد قدرتی طور پر خشک یا حساس ہے تو حساس جلد کی پیشگ...
Health

دوائی کے بغیرلاعلاج سمجھا جانے والا مرض اب قابل علاج

ایک نئی تحقیق میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ لاعلاج سمجھے جانے والے مرض ایڈز میں ایک مخصوص طریقہ علاج کے ناقابل یقین نتائج سامنے آئے ہیں جس میں مریض کو دوائیں بھی دینا نہیں پڑتیں۔ سائنسی جریدے نیچر میں شائع ہونے والے ایک تحقیقی مقالے میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ کیلی فورنیا سے تعلق رکھنے والی 66 سالہ خاتون لورین ویلن برگ میں 1992 میں ایچ آئی وی کی تشخیص ہوئی تھی جو اب بغیر کسی دوا یا بون میرو ٹرانسپلانٹ کے صحت یاب ہوگئی ہیں۔ تحقیق کی سربراہی کرنے والے ساؤ پاؤلو یونیورسٹی کے ڈاکٹر ریکارڈو ڈیاز نے اپنی تحقیق میں لکھا کہ اس طریقہ علاج میں وائرس کو جگانے اور مدافعتی نظام کو بڑھانے کی کوشش کی گئی تھی تاکہ وہ ایک وار میں ہی چھپے ہوئے وائرس کا خاتمہ کردے۔ ڈاکٹر ریکارڈو نے مزید لکھا کہ نکوٹینمائیڈ متاثرہ خلیات میں وائرس سے لڑنے کے ساتھ ساتھ انہیں تباہ کرنے پر مجبور کرتی ہے اور دوسری طر...
Science

جاپان کا پرواز کرنے والی کار کے کامیاب تجربے کا دعویٰ

ویسے اب دنیا میں اُڑنے والی کاروں کا خیال نیا نہیں کیوں کہ گزشتہ چند سالوں سے کئی ٹیکنالوجی کمپنیاں ایسی گاڑیاں بنانے میں مصروف ہیں جو روڈ پر چلنے سمیت پرواز کرنے کی بھی صلاحیت رکھتی ہوں۔ گوگل اور اوبر سمیت جرمنی، فرانس، جاپان، امریکا، سوئٹزرلینڈ اور چین کی کئی کمپنیاں ایسی کاریں تیار کرنے میں مصروف ہیں جو نہ صرف اڑ سکیں گی بلکہ وہ ایندھن کے بجائے بجلی پر چلیں گی۔ ایسی ہی گاڑیاں تیار کرنے والی کمپنیوں میں جاپانی کمپنی اسکائے ڈرائیو انشورنس بھی ہے، جس نے دعویٰ کیا ہے کہ ان کی بنائی گئی چھوٹی پرواز کرنے والی کار کو اڑانے کا کامیاب تجربہ کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ امریکی اقتصادی جریدے فوربز نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ جاپان کار ساز کمپنی ٹویوٹا کی معاونت سے چلنے والی نئی کمپنی اسکائے ڈرائیو انشورنس نے دعویٰ کیا ہے کہ انہوں نے اڑنے والی کار کا کامیاب تجربہ کیا ہے۔ کمپنی نے پرو...
Science

سعودی عرب واٹس ایپ جیسی ایک اور ایپلیکیشن بنانے کی کوشش میں مصروف

سعودی عرب نے واٹس ایپ جیسی میسجنگ ایپ بنانے کی تیاری شروع کر دی۔ غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق سعودی عرب کی میسجنگ ایپ جلد تیار کر لی جائے گی جسے ایک سال کے اندر صارفین استعمال کر سکیں گے۔ ڈاریکٹر نیشنل سینٹر آف انفارمیشن سیکیورٹی ڈاکٹر باسل کے مطابق یہ ایپ مکمل طور پر سعودی افراد تیار کر رہے ہیں اور اس میں صارفین کی پرائیویسی اور سیکیورٹی کا خاص خیال رکھا گیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ واٹس ایپ کے متبادل یہ ایپلیکیشن ایک سال کے اندر لانچ کر دی جائے گی۔ اس سے قبل کورونا وائرس کے دوران لاک ڈاؤن کی وجہ سے تاجروں کو بہت پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا تھا تاہم چھوٹے کاروبار سے وابستہ افراد نے کاروبار جاری رکھنے کے لیے واٹس ایپ بزنس ورژن کا سہارا لیا تھا جس کا بہت فائدہ ہوا تھا۔ واٹس ایپ بزنس پر ہر ماہ پچاس لاکھ سے زائد صارفین نے اکاؤنٹ بنایا جن میں سے ڈیڑھ کروڑ افراد کا تعل...
Health

کورونا کے بعد ایک اور خطرناک وباء کےپھیلنے کا خدشہ: آئی ایم بی

انڈیپنڈنٹ مانیٹرنگ بورڈ نے اعلان کیا ہے کہ پاکستان میں وبائی صورتحال انتہائی تشویشناک اور مایوس کن ہے بالخصوص صوبہ خیبرپختونخوا کے جنوبی علاقوں کے ساتھ ساتھ کراچی اور کوئٹہ کے اہم ذخیرہ آب میں وائلڈ پولیو وائرس کا پھیلاؤ جاری ہے۔ آئی ایم بی پولیو کے خاتمے کے عالمی پروگرام کے تحت عالمی سطح پر پولیو کی ترسیل اور سراغ لگانے کے سلسلے میں ہونے والی پیش رفت کا آزادانہ جائزہ فراہم کرتا ہے۔ اس عالمی صحت کی تنظیم کو خدشہ ہے کہ روایتی ذخیرہ آب سے ہٹ کر پاکستان میں پولیو سے پاک علاقوں میں یہ وائرس پھیل رہا ہے اور ویکسین سے لگنے والا پولیو وائرس بھی پاکستان میں جگہ بنا رہا ہے۔ آئی ایم بی نے اپنی رپورٹ میں لکھا کہ 'اگر بڑے پیمانے پر ویکسینیشن کی سرگرمی نہ ہوئی تو سال کے آخر تک توقع سے زائد پولیو کیسز سامنے آسکتے ہیں اور یہ تعداد سیکڑوں میں ہوسکتی ہے'۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ آئی ایم...